***** دیگر فتاوی مطالعہ کرنے کے لئے داہنی جانب والی فہرست پر کلک کریں *****



مضامین کی فہرست

فتاویٰ > تلاش کریں

Share |
سرخی : f 119    روضۂ اطہر کی حاضری سے متعلق ایک حدیث شریف کی تحقیق
مقام : دبی,
نام : سید راشد
سوال:     حج کے بعد حجاج کرام حضور صلی اللہ علیہ والہ وسلم کے دربار میں حاضر ہوتے ہیں، زائرین روضۂ اطہر کے لئے حضور صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے بشارت دی ہے کہ آپ ان کی شفاعت فرمائینگے؟
سید راشد ، دبی

............................................................................
جواب:     آپ نے جس حدیث مبارک سے متعلق سوال کیا ہے وہ حدیث پاک سنن دارقطنى،شعب الإيمان للبيهقي،جامع الأحاديث،جمع الجوامع،مجمع الزوائد اور كنز العمال وغیرہ
میں موجود ہے :

   عن ابن عمر ، قال : قال رسول الله صلى الله عليه وسلم : « من زار قبري وجبت له شفاعتي-


ترجمہ: سیدنا عبد اللہ ابن عمررضی اللہ تعالی عنہما سے روایت ہے ،آپ نے فرمایا کہ حضرت رسول اللہ صلی اللہ علیہ والہ وسلم نے ارشاد فرمایا: جس نے میرے روضۂ اطہر کی زیارت کی اس کے لئے  میری شفاعت  واجب ہوچکی  ہے-

سنن الدارقطنى: کتاب الحج، حدیث نمبر::2727-
(شعب الإيمان للبيهقي، الخامس و العشرين من شعب الإيمان و هو باب في المناسك ، فضل الحج و العمرة حدیث نمبر: 4159)
جامع الأحاديث، حرف الميم، حدیث نمبر: 22304-
جمع الجوامع، حرف الميم،  حدیث نمبر: 5035
مجمع الزوائد ،ج 4،ص 6،حدیث نمبر:5841-
كنز العمال ، زيارة قبر النبي صلى الله عليه وسلم،حدیث نمبر: 42583-
واللہ اعلم بالصواب
سیدضیاءالدین عفی عنہ ،
نائب شیخ الفقہ جامعہ نظامیہ ،
بانی وصدر ابو الحسنات اسلامک ریسرچ سنٹر ۔
حیدرآباد دکن۔





All Right Reserved 2009 - ziaislamic.com