***** دیگر فتاوی مطالعہ کرنے کے لئے داہنی جانب والی فہرست پر کلک کریں *****



مضامین کی فہرست

فتاویٰ > اخلاق کا بیان > آداب

Share |
سرخی : f 553    کھلے آسمان کے نیچے سونا کیسا ہے ؟
مقام : انڈیا,
نام : پٹھان قیصر
سوال:     میں سخت دھوپ کی وجہ سے آسمان کے نیچے سوتاہوں ،لیکن میرے ایک ساتھی نے بتایا کہ آسمان کے نیچے سونا درست نہیں، کیا ایسا کہنا درست ہے؟
............................................................................
جواب:     وعلیکم السلام ورحمة اللہ وبرکاتہ ، آسمان کے نیچے سونے کی ممانعت والی کوئی روایت نظرسے نہیں گزری ،صحابہ کرام عہد نبوی میں اور بعد کے ادوار میں مختلف مہمات کے لئے سفرکے دوران آسمان کے نیچے آرام کرتے کیونکہ ہر وقت ہر ایک کے لئے خیمہ کا انتظام تو نہیں ہوا کرتا تھا،اس سے معلوم ہوتا ہے کہ آسمان کے نیچے سونے کی ممانعت نہیں ہے ،نیز کھلی فضاء اور خوشگوار ماحول کی خاطرآسمان کے نیچے سوناممنوع نہیں ،تاہم موذی حشرات الارض وغیرہ سے بچنے کے لئے محفوظ مقام پرسونا بہتر ہے ۔
واللہ اعلم بالصواب –
سیدضیاءالدین عفی عنہ ،
نائب شیخ الفقہ جامعہ نظامیہ
بانی وصدر ابو الحسنات اسلامک ریسرچ سنٹر ۔www.ziaislamic.com
حیدرآباد دکن
21-04-2010
All Right Reserved 2009 - ziaislamic.com