***** دیگر فتاوی مطالعہ کرنے کے لئے داہنی جانب والی فہرست پر کلک کریں *****



مضامین کی فہرست

فتاویٰ > تلاش کریں

Share |
سرخی : f 809    حضرت عثمان رضی اللہ عنہ سے بغض کا نتیجہ
مقام : انڈیا،نظام آباد,
نام : محمد افضل
سوال:    

مفتی صاحب ! میں ایک حدیث شریف کی تحقیق اور اس کا حوالہ چاہتا ہوں، ایک مرتبہ ایک عالم صاحب تقریر کرتے ہوئے ایک حدیث شریف بیان کئے تھے ، حضرت رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم کے پاس ایک شخص کا جنازہ لایاگیاتھا تو آپ نے اس کی نماز نہیں پڑھی ،درخواست کرنے پر فرمایا کہ یہ شخص عثمان رضی اللہ عنہ سے بغض رکھتا تھا۔


............................................................................
جواب:    

آپ نے جس حدیث پاک سے متعلق دریافت کیا ہے وہ حدیث شریف جامع ترمذی شریف،ابواب المناقب ،ص212،میں ہے۔ عَنْ جَابِرٍ قَالَ أُتِيَ رَسُولُ اللَّهِ صَلَّى اللَّهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ بِجَنَازَةِ رَجُلٍ لِيُصَلِّيَ عَلَيْهِ فَلَمْ يُصَلِّ عَلَيْهِ فَقِيلَ يَا رَسُولَ اللَّهِ مَا رَأَيْنَاكَ تَرَكْتَ الصَّلَاةَ عَلَى أَحَدٍ قَبْلَ هَذَا قَالَ إِنَّهُ كَانَ يُبْغِضُ عُثْمَانَ فَأَبْغَضَهُ اللَّه - حضرت جابر رضی اللہ عنہ سے روایت ہے ، فرماتے ہیں کہ حضرت رسول اکرم صلی اللہ علیہ وسلم کی خدمت اقدس میں ایک شخص کاجنازہ لایا گیا کہ آپ اس کی نمازجنازہ پڑھائیں توآپ نے اس کی نماز جنازہ نہیں پڑھی ، صحابہ کرام نے عرض کیا:یا رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم !ہم نے آپ کو اس سے پہلے کسی کی نماز جناز ہ ترک فرما تے ہوئے نہیں دیکھا ،تو حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا کہ یہ شخص عثمان(رضی اللہ عنہ) سے بغض رکھتا تھا تو اللہ تعالی نے اس کو سخت نا پسند فرمایاہے۔ (جامع ترمذی شریف ج 2،ابواب المناقب ،ص212، حدیث نمبر:3709) واللہ اعلم بالصواب سید ضیاء الدین عفی عنہ شیخ الفقہ جامعہ نظامیہ بانی وصدرابوالحسنات اسلامک ریسرچ سنٹر www.ziaislamic.comحیدرآباد ، دکن ،انڈیا-0

All Right Reserved 2009 - ziaislamic.com