AR 479 : ام المؤمنین سیدہ عائشہ صدیقہ رضی اللہ عنہا

ام المؤمنین سیدہ عائشہ صدیقہ رضی اللہ عنہا

ام المؤمنین سیدہ عائشہ صدیقہ  رضی اللہ عنہا افضل البشر بعد الانبیاء سیدنا ابوبکر صدیق رضی اللہ عنہ کی صاحبزادی ہیں۔

 آپ کی والدہ محترمہ کا نام سیدتنا  ام رومان رضی اللہ عنہا ہے ۔

عقد نکاح:

ہجرت سے تین سال قبل ماہ شوال المکرم میں حضور  اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے آپ سے نکاح فرمایا اور ایک ہجری میں رخصتی ہوئی اس وقت آپ کی عمر مبارک 9 سال تھی۔

آپ کے علاوہ کسی اور بے بیاہی سے حضور اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے نکاح نہیں فرمایا ۔

 آپ کی کئی خصوصیات اور فضائل ہیں جن میں یہ ہے کہ آپ بستر نبوت پر ہوتیں اس حالت میں بھی نزول وحی ہوتا۔

آپ کی برأت اورپاکدامنی پر وحی نازل ہوئی ۔

 صحیح بخاری ومسلم میں  حدیث مبارک ہے :

حَدَّثَنِى أَبُو سَلَمَةَ بْنُ عَبْدِ الرَّحْمَنِ أَنَّ عَائِشَةَ رَضِىَ اللهُ عَنْهَا زَوْجَ النَّبِىِّ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ قَالَتْ قَالَ رَسُولُ اللَّهِ  صلى الله عليه وسلم : يَا عَائِشَ هَذَا جِبْرِيلُ يُقْرِئُكِ السَّلاَمَ  قُلْتُ وَعَلَيْهِ السَّلاَمُ وَرَحْمَةُ اللَّهِ . قَالَتْ وَهْوَ يَرَى مَا لاَ نَرَى .

ترجمہ :حضرت ابوسلمہ بن عبد الرحمن  رضی اللہ عنہما  سے  روایت ہے کہ  ام المؤمنین عائشہ صدیقہ  رضی اللہ عنہا نے فرمایا کہ حضرت  رسول اللہ صلی اللہ علیہ والہ وسلم  نے ارشاد فرمایا : ائے عائشہ! یہ جبریل ہیں، تمہیں سلام کہتے ہیں ‘ تو میں  نے جواب دیا کہ ان پر سلام اور اللہ کی رحمت ہو۔ اورآپ نے ارشاد فرمایا  حضور اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم  وہ  دیکھتے ہیں  جو ہم نہیں  دیکھ سکتے ۔

 (صحیح بخاری ،کتاب الأدب، باب من دعا صاحبه فنقص من اسمه حرفا، حدیث نمبر: 6201۔ صحیح مسلم ، باب فى فضل عائشة رضى الله تعالى عنها. ،حدیث نمبر:  6457

ام المؤمنین رضی اللہ عنہا کا علمی مقام :

تقریباً دوہزار دوسو دس (2210) احادیث شریفہ آپ سے مروی ہیں۔

جامع ترمذی شریف میں روایت ہے:

عَنْ أَبِى مُوسَى قَالَ مَا أَشْكَلَ عَلَيْنَا أَصْحَابَ رَسُولِ اللَّهِ صَلَّى اللهُ عَلَيْهِ وَسَلَّمَ حَدِيثٌ قَطُّ فَسَأَلْنَا عَائِشَةَ إِلاَّ وَجَدْنَا عِنْدَهَا مِنْهُ عِلْمًا. قَالَ أَبُو عِيسَى هَذَا حَدِيثٌ حَسَنٌ صَحِيحٌ غَرِيبٌ.

ترجمہ: حضرت ابو موسیٰ اشعری رضی اللہ عنہ  سے روایت ہے ،آپ  فرماتے ہیں کہ ہم اصحاب رسول اللہ صلی اللہ علیہ وسلم پر جب بھی  کسی  حدیث شریف سے متعلق (استنباط مسائل میں) مشکل ہوتی تو  ہم حضرت  عائشہ رضی اللہ عنہا  سے پوچھتے،اور آپ  کے پاس اس کا علم پاتے .

(جامع ترمذی، باب فضل عائشة رضى الله عنها. حدیث نمبر: 4257)

ونیز جامع ترمذی شریف میں مروی ہے :

 عَنْ مُوسَى بْنِ طَلْحَةَ قَالَ مَا رَأَيْتُ أَحَدًا أَفْصَحَ مِنْ عَائِشَةَ۔

ترجمہ: حضرت موسیٰ ابن طلحہ  رضی اللہ عنہ فرماتے ہیں کہ میں نے حضرت عائشہ  رضی اللہ عنہا سے زیادہ کسی کو فصیح و بلیغ نہ دیکھا۔

(جامع ترمذی، باب فضل عائشة رضى الله عنها. حدیث نمبر: 4258)

ام المومنین حضرت عائشہ صدیقہ رضی اللہ عنہا سے روایت ہے،آپ  فرماتی ہیں: جبرئیل علیہ السلام نے فرمایا میں نے مشرق و مغرب کا ہر حصہ دیکھ لیا حضور نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم سے افضل کسی کو نہیں پایا اور کسی خاندان کو بنی ہاشم سے بڑھ کر فضیلت والا نہ پایا۔

(معجم طبرانی ، بیہقی)

وصال مبارک:

 حضور پاک صلی اللہ علیہ وسلم کے وصال مبارک کے وقت آپ کی عمر شریف  اٹھارہ 18 سال تھی، آپ کا وصال اٹھاون 58 ہجری میں ہوا۔ نماز جنازہ حضرت ابوہریرہ رضی اللہ عنہ نے پڑھائی اور جنت البقیع میں تدفین عمل میں آئی ۔

از:ضیاء ملت حضرت علامہ مولانا مفتی حافظ سید ضیاء الدین نقشبندی مجددی قادری صاحب دامت برکاتہم العالیہ

 شیخ الفقہ جامعہ نظامیہ وبانی ابو الحسنات اسلامک ریسرچ سنٹر

www.ziaislamic.com

 




submit

  AR: 502   
راہ خدا میں خرچ کرنے کی فضيلت
..........................................
  AR: 501   
لیلۃ الجائزۃ (انعام والی رات)
..........................................
  AR: 500   
اعتکاف احکام ومسائل
..........................................
  AR: 499   
تذکرہ ام المؤمنین سیدہ عائشہ صدیقہ رضی اللہ تعالی عنہا
..........................................
  AR: 498   
ماہ رمضان المبارک کی فضیلت وعظمت پرمشتمل پچیس 25 احادیث شریفہ
..........................................
  AR: 497   
روزہ فوائد وثمرات
..........................................
  AR: 496   
روزہ فوائد وثمرات
..........................................
  AR: 495   
عشرۂ ذی الحجہ فضائل واحکام
..........................................
  AR: 494   
رئیس العلماء حضرت علامہ مولانا سید شاہ طاہر رضوی قادری نجفی رحمۃ اللہ تعالی علیہ صدرالشیوخ جامعہ نظامیہ
..........................................
  AR: 493   
غزوۂبدر،ایک مطالعہ
..........................................
  AR: 492   
رمضان کے تین عشرے اور ان کی خصوصیات
..........................................
  AR: 491   
حسن اخلاق کی تعلیم اور اسلام
..........................................
  AR: 490   
حسد کی تباہ کاریاں اور اس کے نقصانات
..........................................
  AR: 489   
أَلَمْ يَجِدْكَ يَتِيمًا فَآَوَى کی نفیس تفسیر
..........................................
  AR: 488   
حدیث زيارت 'علماء ومحدثین کی نظر میں
..........................................
  AR: 487   
حضور اکرم صلی اللہ علیہ والہ وسلم کا حج
..........................................
  AR: 486   
حج کے اقسام:
..........................................
  AR: 485   
حج ایک عظیم فریضہ،استطاعت کے باوجود ترک کرنے پر سخت وعید
..........................................
  AR: 484   
حج ایک اسلامی فریضہ
..........................................
  AR: 483   
کامیاب کون؟
..........................................
Copyright 2008 - Ziaislamic.com All Rights reserved