***** دیگر فتاوی مطالعہ کرنے کے لئے داہنی جانب والی فہرست پر کلک کریں *****



مضامین کی فہرست

فتاویٰ > تلاش کریں

Share |
سرخی : f 906    خلوت صحیحہ کے بغیر طلاق
مقام : اورنگ آباد ، انڈیا,
نام : محمد نذیراحمد
سوال:    

ہمارے احباب میں سے ایک صاحب کے لڑکے کی شادی ہوئی چند وجوہات کی وجہ سے شادی کی رات ہی لڑکے نے اپنی بیوی کو طلاق دے دی، سوال یہ ہیکہ اس لڑکی کو کتنے دن عدت گزارنی چاہئے اور لڑکے نے مہرادا نہیں کیا تو کیا طلاق دینے کے وجہ مہر دینا پڑیگا جبکہ دلہا دلہن کی تنہائی میں ملاقات بھی نہیں ہوئی ؟


............................................................................
جواب:    

شوہر نے بیوی سے ازدواجی تعلق قائم نہ کیا ہو اور دونوں کے مابین خلو ت صحیحہ بھی نہ ہوئی ہو ، ایسی عورت کو شوہر طلاق دے دے تو اس کے لئے عدت گزارنا ازروئے شرع ضروری نہیں۔فتاوی عالمگیری ج 1ص 526میں ہے:اربع من النساء لاعدۃ علیھن المطلقۃ قبل الدخول۔ ترجمہ : جس عورت کو صحبت و خلوت صحیحہ سے پہلے طلاق دی جائے اس پر عدت واجب نہیں۔ ارشاد الہی ہے: یَا أَیُّہَا الَّذِینَ آَمَنُوا إِذَا نَکَحْتُمُ الْمُؤْمِنَاتِ ثُمَّ طَلَّقْتُمُوہُنَّ مِنْ قَبْلِ أَنْ تَمَسُّوہُنَّ فَمَا لَکُمْ عَلَیْہِنَّ مِنْ عِدَّۃٍ تَعْتَدُّونَہَا۔ ترجمہ: اے ایمان والو! جب تم مومن عورتوں سے نکاح کرو پھر انہیں طلاق دے دو اس سے پہلے کہ تم انہیں ہاتھ نہ لگاؤ (یعنی خلوت صحیحہ کے بغیر)تو تمہارے لئے ان پر کوئی عدّت نہیں ہے جسے تم شمار کرنے لگو۔ (سورۃ الاحزاب۔49) واضح رہے کہ خلوت صحیحہ اس وقت ہوتی ہے جب دلہا دلہن ایسے مقام پر جمع ہوں ، جہاں صحبت سے کوئی چیزحسی طورپر یا شرعی طورپر یا طبعی طورپر مانع نہ ہو۔ فتاوی عالمگیری 1ج ص 304میں ہے:والخلوۃ الصحیحۃ ان یجتمعا فی مکان لیس ھناک مانع یمنعہ من الوطاء حسا اوشرعا او طبعا۔ اگر مہر ادا نہیں کیا گیا تو شوہر کے لئے ضروری ہے کہ جتنا مہر مقرر کیا گیا تھا اس کا آدھا مہر مطلقہ زوجہ کو دے ۔ درمختار ج2 باب المھر میں ہے :(و) یجب (نصفہ بطلاق قبل وطء اوخلوۃ) ۔ ترجمہ : صحبت و خلوت صحیحہ سے پہلے طلاق دینے کی صورت میں نصف مہر واجب ہوتاہے۔ سوال میں مذکور لڑکے نے صحبت اور خلو ت صحیحہ سے پہلے طلاق دی ہے لہذا لڑکی کے لئے عدت گزارنا ضروری نہیں البتہ لڑکے کے ذمہ نصف مہر کی ادائیگی لازم ہے۔ واللہ اعلم بالصواب سیدضیاء الدین نقشبندی عفی عنہ شیخ الفقہ جامعہ نظامیہ بانی ابوالحسنات اسلامک ریسرچ سنٹرwww.ziaislamic.com حیدرآباد،دکن

All Right Reserved 2009 - ziaislamic.com