***** دیگر فتاوی مطالعہ کرنے کے لئے داہنی جانب والی فہرست پر کلک کریں *****
 
f327: بیٹھ کر نماز پڑھے تو رکوع کیسے کیا جائے؟ <Back
سوال

ہمارے ماموں اٹھنے بیٹھنے کی طاقت نہیں رکھتے، وہ بیٹھ کر نماز پڑھتے ہیں، اس بارے میں انہیں خلش رہتی ہے کہ ایسے وقت کس طرح رکوع کریں، مہربانی فرماکر یہ بتلادیں بیٹھ کر نماز پڑھنے کے وقت رکوع میں کتنا جھکنا چاہئے؟

جواب

کھڑے ہوکر نماز اداکرنے سے عاجز وقاصر ہونے کی صورت میں فرض نماز بھی بیٹھ کر ادا کرنے کی شرعاً اجازت ورخصت ہے، اس صورت میں رکوع کرنے کا کامل درجہ یہ ہے کہ پیشانی گھٹنوں کے مقابل رہے‘ تاہم پیٹھ اور سر کے جھک جانے سے بھی نفس رکوع اداہوجاتاہے۔ ردالمحتار ج1کتاب الصلوۃ میں ہے: وفی حاشیۃ الفتال عن البرجندی : ولو کان یصلی قاعدا ینبغی أن یحاذی جبہتہ قدام رکبتیہ لیحصل الرکوع اہ۔. قلت: ولعلہ محمول علی تمام الرکوع ، وإلا فقد علمت حصولہ بأصل طأطأۃ الرأس أی مع انحناء الظہر تأمل۔ واللہ اعلم بالصواب سیدضیاءالدین عفی عنہ ، شیخ الفقہ جامعہ نظامیہ بانی وصدر ابو الحسنات اسلامک ریسرچ سنٹر ۔ حیدرآباد دکن۔

All Right Reserved 2009 - ziaislamic.com