***** دیگر فتاوی مطالعہ کرنے کے لئے داہنی جانب والی فہرست پر کلک کریں *****



مضامین کی فہرست

فتاویٰ > عبادات > نماز کا بیان > قراءت کے مسائل

Share |
سرخی : f 1006    ایک سورہ کی مکرر تلاوت کا حکم
مقام : عادل آباد، انڈیا,
نام : مہ جبین سلطانہ
سوال:     میں سنی ہوں کہ ایک رکعت میں ایک سورہ کو دو مرتبہ پڑھنا صحیح نہیں۔ لیکن میں  بعض نفل نمازوں کے بارے میں پڑھی ہوں کہ سورہ اخلاص ہر رکعت میں تین مرتبہ پڑھنے‘ بعض نمازوں میں دوسری سورتوں کو تین بار یا پانچ بار پڑھنے کا ذکر ہے۔ دونوں میں صحیح مسئلہ کیا ہے؟
............................................................................
جواب:     نماز کی کوئی ایک رکعت میں کسی سورہ کو تکرار کے ساتھ دوبارہ یا سہ بارہ پڑھنے سے متعلق فقہائے کرام نے تفصیل ذکر کی ہے۔ فرض نماز کی ایک رکعت میں سورۃ کو تکرار کے ساتھ دوبارہ یا سہ بارہ پڑھنا مکروہ تنزیہی ہے۔ اس کی وجہ سے نماز فاسد یا باطل تو نہیں ہوتی البتہ کراہت تنزیہی کے ساتھ درست ہو جاتی ہے ، یہ حکم فرض نمازوں کا ہے۔ اور نوافل کی ایک رکعت میں ایک ہی سورۃ کو ایک سے زائد مرتبہ پڑھنا بلا کسی کراہت کے جائز ہے۔
آپ نے نفل نمازوں سے متعلق ایک ہی رکعت میں کسی خاص سورہ کو تین یا پانچ مرتبہ پڑھنے کے سلسلہ میں جو دریافت کیا ہے اس بارے میں فقہی تصریحات کے مطابق کوئی کراہت نہیں ہے۔
فتاویٰ عالمگیری ج 1 ص 107 میں ہے : وَيُكْرَهُ تَكْرَارُ السُّورَةِ فِي رَكْعَةٍ وَاحِدَةٍ فِي الْفَرَائِضِ وَلَا بَأْسَ بِذَلِكَ فِي التَّطَوُّعِ ۔  ترجمہ: ایک رکعت میں ایک سورۃ کو مکرر پڑھنا فرائض میں مکروہ ہے اور نوافل میں مکرر تلاوت کرنے میں کوئی مضائقہ نہیں۔
واللہ اعلم بالصواب –
سیدضیاءالدین عفی عنہ ،
شیخ الفقہ جامعہ نظامیہ
بانی وصدر ابو الحسنات اسلامک ریسرچ سنٹر ۔www.ziaislamic.com
حیدرآباد دکن

All Right Reserved 2009 - ziaislamic.com