***** دیگر فتاوی مطالعہ کرنے کے لئے داہنی جانب والی فہرست پر کلک کریں *****



مضامین کی فہرست

فتاویٰ > عبادات > نماز کا بیان > زیارت قبور و ایصال ثواب

Share |
سرخی : f 1125    ایصال ثواب اورزیارت قبور
مقام : حیدرآباد ۔انڈیا,
نام : فہیم
سوال:    

اگرکوئی فاتحہ پڑھنے اور درگاہ جانے کو گناہ کہے اور شرک کہے تو اس کا کیا جواب ہوگا؟


............................................................................
جواب:    

فاتحہ میں دراصل ایصال ثواب ہوتا ہے‘ او راعمال صالحہ کا ثواب ایصال کرنا احادیث شریفہ سے ثابت ہے اور زیارت قبور سنت ہے‘ جو امور احادیث شریفہ سے ثابت ہیں‘ اُن کو گناہ کہنا ناواقفیت یا شریعت مطہرہ کی خلاف ورزی ہے اور یہ خود گناہ اور اللہ تعالیٰ کی ناراضگی کا سبب ہے‘ نیز اس کو شرک کہنا اللہ کی ذات پر جھوٹ گھڑنا ہے۔ ارشاد الٰہی ہے: فمن اظلم ممن افتریٰ علی اللہ الکذب – ترجمہ: اس شخص سے زیادہ ظلم کرنے والا کون ہے جس نے اللہ پرظلم گھڑاہو واللہ اعلم بالصواب – سیدضیاءالدین عفی عنہ ، شیخ الفقہ جامعہ نظامیہ بانی وصدر ابو الحسنات اسلامک ریسرچ سنٹر ۔ حیدرآباد دکن

All Right Reserved 2009 - ziaislamic.com