***** دیگر فتاوی مطالعہ کرنے کے لئے داہنی جانب والی فہرست پر کلک کریں *****



مضامین کی فہرست

فتاویٰ > معاملات > حلال و حرام کا بیان

Share |
سرخی : f 1319    کیا جادوکا اثریقینی ہے؟
مقام : ہندوستان,
نام : محمد شاکر‘ انڈیا
سوال:     کچھ لوگ جادو ٹونا پر یقین رکھتے ہیں‘ کیا یہ صحیح ہے؟ اگر کوئی شخص دوسرے شخص پر جادو کرتا ہے تو کیا اس پر جادو ہوگا یا نہیں؟ برائے مہربانی مکمل جواب دیجئے۔

............................................................................
جواب:     جادو ٹونا کرنا‘ کسی کو تکلیف پہنچانا حرام ہے لیکن یہ بات اپنی جگہ درست ہے کہ جادو ایک حقیقت ہے‘ جادو کا اثر دوسرے شخص پر ہوتا ہے۔ اللہ تعالیٰ نے قرآن کریم میں اس کا ذکر فرمایا اور اس کی مذمت کی‘ ارشاد الٰہی ہے:
وَیَتَعَلَّمُونَ مَا یَضُرُّہُمْ وَلاَ یَنفَعُہُمْ۔

ترجمہ: وہ ایسی چیز سیکھتے ہیں جو اُن کے لئے ضرر رساں ہے اور اُنہیں فائدہ نہیں دیتی۔ (سورۃ البقرۃ: 102)
سورۃ البقرۃ کی آیت نمبر: 102 میں یہودیوں کے جادو سیکھنے اور اس کے نقصانات کا ذکر اور اس کی شدید مذمت و برائی مذکور ہے۔
واللہ اعلم بالصواب
سیدضیاءالدین عفی عنہ ،
شیخ الفقہ جامعہ نظامیہ ،
بانی وصدر ابو الحسنات اسلامک ریسرچ سنٹر ۔
حیدرآباد دکن۔
All Right Reserved 2009 - ziaislamic.com