***** دیگر فتاوی مطالعہ کرنے کے لئے داہنی جانب والی فہرست پر کلک کریں *****



مضامین کی فہرست

فتاویٰ > معاشرت > نکاح کا بیان

Share |
سرخی : f 487    کیا لڑکا خود  اپنے لئے لڑکی کا انتخاب کرسکتاہے ؟
مقام : ,
نام : محمد عبد خالق
سوال:     مجھے یہ جاننا ہے کہ خود اپنے لئے شریک حیات ڈھونڈنا کیسا ہے ؟
............................................................................
جواب:     آپ حدود شریعت میں رہتے ہوئیے شریک حیات کا انتخاب کرسکتے ہیں، انتخاب کی غرض سے لڑکی کا چہرہ دیکھنا جائز ہے ۔ اس سے رشتہ محبت میں پائداری ہوتی ہے جیساکہ سنن ترمذی شریف میں حدیث پاک ہے ؛
عن المغیرة بن شعبة انہ خطب امراة فقال النبی صلی اللہ علیہ وسلم انظر الیھا فانہ احری ان یؤدم بینکما۔
ترجمہ ؛ سیدنا مغیرہ بن شعبہ  رضی اللہ عنہ سے   روایت ہے کہ انہوں نے کسی خاتون کو پیام بھیجا تو حضرت نبی اکرم صلی اللہ علیہ وسلم نے ارشاد فرمایا ؛ اُسے دیکھ لو کیونکہ یہ اس کے مناسب ہیکہ تم دونوں کے درمیان محبت والفت قائم رہے ۔ ﴿سنن ترمذی شریف ،ابواب النکاح ،باب ماجاء فی النظر الی المخطوبة ،حدیث نمبر: 1110﴾
البحرالرائق شرح کنز الدقائق میں نکاح کے بیان میں ہے ؛
ونظرہ الی مخطوبة قبل النکاح سنة فانہ داعیة للالفة ۔﴿البحرالرئق ،کتاب النکاح ﴾
واللہ اعلم بالصواب –
سیدضیاءالدین عفی عنہ ،
شیخ الفقہ جامعہ نظامیہ
بانی وصدر ابو الحسنات اسلامک ریسرچ سنٹر ۔www.ziaislamic.com
حیدرآباد،دکن

All Right Reserved 2009 - ziaislamic.com