***** دیگر فتاوی مطالعہ کرنے کے لئے داہنی جانب والی فہرست پر کلک کریں *****



مضامین کی فہرست

فتاویٰ > عبادات > حج وعمره کا بیان > مدینۂ طیبہ اور مسجد نبوی

Share |
سرخی : f 632    جمال بال جنت البقیع میں دفن کرنا کیسا ہے؟
مقام : جدہ، سعودیہ عربیہ,
نام : محمد عبدالصمد
سوال:     السلام علیکم!کیا میں اپنے لڑکے کے جمال بال مدینہ شریف، جنت البقیع میں گاڑسکتا ہوں؟ شکریہ جزاک اللہ-
............................................................................
جواب:     وعلیکم السلام و رحمۃ اللہ و برکاتہ!بچوں کے جمال بال بقیع شریف میں دفن کرنا سلف صالحین سے ثابت نہیں، البتہ مدینہ طیبہ کی سرزمین مقدس میں پیوند خاک ہونے کی ہر مسلمان کو تمنا رکھنی چاہئے، کیونکہ اس کی بابت احادیث شریفہ میں فضائل وارد ہوئے ہیں- من استطاع ان يموت بالمدينة فاليمت بها فانی اشفع لمن يموت بها-
             ترجمہ:جوشخص مدینہ طیبہ میں انتقال کرسکتا ہے تو اسے چاہئے کہ مدینہ طیبہ میں انتقال کرجائے کیونکہ میں ان لوگوں کی شفاعت کروں گا جو اس میں انتقال کرتے ہیں- (جامع ترمذی، ابواب المناقب، باب فی فضل المدینۃ، حدیث نمبر: 4296)-
واللہ اعلم بالصواب –
سید ضیاءالدین عفی عنہ ،
نائب شیخ الفقہ جامعہ نظامہ  
بانی وصدر ابو الحسنات اسلامک ریسرچ سنٹر ۔www.ziaislamic.com
حیدرآباد دکن
23-06-2010
All Right Reserved 2009 - ziaislamic.com